اسلامک طبislamic tibb,

غور کریں کہ قانون قدرت و قانون فطرت اور سنت الہیہ کے تحت مرض کا تصور کیا ہے اس حقیقت سے تو انکار نہیں ہے کہ مرض جس طرح بھی پیدا ہو بہرحال وہ کسی نہ کسی قانون صحت کی خلاف ورزی ہو گا یاد رکھیں کہ برائی کبھی قانون کے تحت نہیں ہوتی بلکہ برائی وہ شے یا عمل ہے جو نیکی اوربھلائی کی خلاف ورزی سے پیدا ہوتی ہے تو مرض بھی کسی قانون کے تحت پیدا نہیں ہوتا بلکہ جب صحت کے قانون کی خلاف ورزی کی جاتی ہے۔

Read More

نظام مصطفیٰ ﷺ کاحسین پہلو اخوت و بھائی چارہ,nizaam mustafa ka haseen pehlu akhuwat o bhai charah,

’’بے شک تم میں ایک مسلمان اپنے بھائی کا آئینہ ہے۔ اس میں کوئی برائی یا تکلیف دیکھے تو چاہیے کہ دور کر دے‘‘۔ (ترمذی)
حضرت ابو الدردا رضی اللہ عنہ راوی ہیں کہ حضور پر نور ﷺ نے فرمایا کہ جو اپنے بھائی کی عزت کو واپس لائے۔ تواللہ تعالیٰ قیامت کے دن اس کے چہرے سے آگ دور فرمائے گا۔ (ترمذی)

Read More

یاداشت کی درستگی کیوں, کیسے کس لیے

عام الفاظ میںاگر حافظے کی تعریف کی جائے تو اسے ذہن کی فطری قوت کہہ سکتے ہیںاور اگر یہی قوت ہماراساتھ نہ دے تو ہم زندگی کے کسی شعبے میںکامیابی حاصل نہیںکرسکتے اور اگر ذہن کے کسی گوشے میںفراموشی کا عنصر نہ ہوتوہم بری طرح ذہنی انتشارکاشکار ہوجائیں۔
قدرتی طورپر اﷲتعالیٰ نے ہر انسان کوحافظے کی قوت کے ساتھ ساتھ فراموشی کی صلاحیت بھی عطاکی ہے اور اگریہ صلاحیت ہ چھن جاتی توذہن اتنے سارے خیالات کی آماجگاہ بن جاتا کہ انسان میںاس کابوجھ اٹھانے کی سکت باقی نہ رہتی۔ یہ گزرے ہوئے واقعات کے حامل خیالات ذہن کو بری طرح مجروح کرتے اور ہرشخص کے لب پر ایک ہی دعاہوتی کہ۔

Read More
Menu